April 24, 2024

Warning: sprintf(): Too few arguments in /www/wwwroot/sat-television.com/wp-content/themes/chromenews/lib/breadcrumb-trail/inc/breadcrumbs.php on line 253
A Palestinian refugee student stands outside a classroom as she waits to attend a ceremony to mark the return to school of a new year at one of the UNRWA schools, in Beirut, Lebanon, Monday, Sept. 3, 2018. The United Nations' Palestinian relief agency celebrated the start of the school year in Lebanon on Monday, managing to open its schools on schedule despite a multi-million dollar budget cut on the heels of U.S. President Donald Trump's decision to stop funding to the agency. (AP Photo/Hussein Malla)

اقوامِ متحدہ کے سکریٹری جنرل نے جمعہ کے روز سعودی عرب کے شاہ سلمان انسانی امدادی مرکز کی طرف سے 40 ملین ڈالر کی امداد کا خیرمقدم کیا جس کا اعلان غزہ میں فلسطینی پناہ گزینوں کے لیے اقوامِ متحدہ کی امدادی ایجنسی کی ہنگامی اپیل کی حمایت کے لیے کیا گیا ہے۔

سعودی پریس ایجنسی کے مطابق انتونیو گوٹیرس نے کہا، “ایک ایسے وقت میں جب غزہ کے لوگوں کو قحط کے خطرے کا سامنا ہے، اس طرح کا عطیہ انروا کی صلاحیتوں کو یقینی بنانے کے لیے بہت اہم ہے جو غزہ کے لوگوں کو ان کی ضرورت کے وقت کام جاری رکھنے اور خدمات فراہم کرنے کے لیے مقبوضہ فلسطینی علاقے میں انسانی ہمدردی کے ردِعمل میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتا ہے۔

اونروا نے تصدیق کی کہ اس عطیہ سے غزہ میں 250,000 سے زیادہ لوگوں کے لیے خوراک اور 20,000 خاندانوں کے لیے خیمے فراہم کیے جائیں گے۔

ایس پی اے کے مطابق اقوامِ متحدہ کے ترجمان نے کہا یہ عطیہ غزہ کے لوگوں کی فلاح و بہبود کو یقینی بنانے کی جانب ایک اہم قدم ہے۔

گوٹیرس نے اسرائیل سے غزہ کے تمام حصوں تک انسانی امداد کی مکمل اور غیر محدود رسائی کو یقینی بنانے کا مطالبہ بھی کیا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *